بہار میں ووٹنگ ختم ، قریب 55 فیصد لوگوں نے اپنے حق رائے دیہی کا استعمال کیا

0
8

پٹنہ : بہار میں سخت حفاظتی انتظامات کے مابین اسمبلی کے پہلے مرحلہ کے لئے آج پرامن طریقے سے ووٹنگ ختم ہوگئی جس میں 55 فیصد سے زائد ووٹروںنے 1066 امیدواروں کی قسمت کا فیصلہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین ( ای وی ایم ) میں قید کر دیا ریاستی الیکشن دفتر کے مطابق بدھ کو 71 اسمبلی سیٹ کیلئے 31380 پولنگ مراکز پر صبح سات بجے سے ووٹنگ شروع ہوئی شام چھ بجے ختم ہوچکی ہے ۔ اس دوران قریب 55 فیصد رائے دہندوں نے اپنے حق رائے دیہی کا استعمال کیا ۔ حالانکہ ابھی بھی کچھ پولنگ مراکز پر ووٹنگ چل رہی ہے اور کچھ مقامات سے آخری رپورٹ کا انتظار ہے ۔ شام چھ بجے تک جموئی ضلع میں سب سے زیادہ قریب 58 فیصد ووٹنگ ہوئی جبکہ مونگیر ضلع میں سب سے کم لگ بھگ 44 فیصد ووٹنگ ہوئی ۔
دریں اثناءبڑہرا سے راشٹریہ جنتادل ( آرجے ڈی ) امیدوار اور رخصت پذیر رکن اسمبلی سروج یادو نے آرہ کے پولنگ مرکز 115 پر اپنے اوپر حملہ ہونے کا دعویٰ کیا۔ انہوں نے کہاکہ کسی طرح بھاگ کر انہوںنے اپنی جان بچائی ہے ۔ حالانکہ انتظامیہ نے اس کی تصدیق نہیںکی ہے ۔ بتایاجارہاہے کہ سروج کی پہلے لوگوں نے مخالفت کی ۔ اس کے بعد بھیڑ سے کچھ لوگوں نے پتھراﺅ شروع کر دیا۔ اسی طرح بھوجپور ضلع کے شاہ پور اسمبلی حلقہ کے سہجولی گاﺅں میں آرجے ڈی امیدوار راہل تیواری اور آزاد امیدوار بٹیشور یادو کے حامیوں کے مابین بوتھ پر قبضے کو لیکر پرتشدد جھڑپ ہوئی جس میں دونوں فریق کے قریب 10 افراد زخی ہیں۔ زخمیوں میں خواتین بھی شامل ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here