کورونا کے چلتے لگائی گئی پابندیوں کا پاپولر فرنٹ نے کیا خیرمقدم

0
20

نئی دہلی،25؍مارچ(زمینی سچ):پاپولر فرنٹ آف انڈیا کے چیئرمین او ایم اے سلام نے میڈیا کو جاری ایک بیان میں کورونا کو پھیلنے سے روکنے کے لئے پورے ملک کو لاک ڈاؤن کئے جانے کے اقدام کا خیرمقدم کیا ہے۔ تاہم انہوں نے اس بات پر بے اطمینانی کا اظہار کیا ہے کہ اتنے بڑے پیمانے پر پابندیوں کے نفاذ کے لئے ضروری تیاریاں نہیں کی گئیں۔ملک کے مختلف حصوں میں انفیکشن سے متاثرین کی تعداد میں تیزی سے اضافہ یہ بتاتا ہے کہ ’کووِڈ-19“ ہندوستان میں بھی صحتِ عامہ کے لئے سنگین خطرہ ہو سکتا ہے۔ اس تباہی کو روکنے کے لئے عالمی سطح پر جو واحد طریقہ اختیار کیا جارہا ہے وہ ہے سماجی دوری۔ پاپولر فرنٹ کے چیئرمین نے اس سلسلے میں مرکزی حکومت کے تین ہفتے کے کرفیو اور ریاستی حکومتوں کے ذریعہ لگائی گئی دیگر پابندیوں کا خیرمقدم کیا ہے۔ انہوں نے لوگوں سے ان تمام اقدامات میں تعاون کرنے کی اپیل کی ہے، تاکہ ہم سب مل کر اس چیلنج پر فتح حاصل کر سکیں۔لیکن وزیر اعظم نے شہریوں کی واقعی پریشانیوں کے حل کے لئے مناسب تیاریوں کے بغیر جس ڈرامائی طریقے سے 21 روزہ ملک گیر کرفیو کا اعلان کیا ہے، وہ مایوس کن ہے۔ دیکھا جا رہا ہے کہ اس اعلان کی وجہ سے عوام کے بیچ کافی بے چینی پیدا ہوئی ہے۔وزیر اعظم کی جانب سے 15000 کروڑ روپئے کا اعلان بھی ملک میں کورونا کو لے کر طبی ایمرجنسی کا سامنا کرنے کے لئے مناسب نہیں ہے۔ غریب دہاڑی مزدور جیسے عام شہریوں کی بڑی اکثریت کی مدد اور ان تک راشن کی فراہمی کو یقینی بنانے کے لئے کوئی بات نہیں کی گئی۔ لوگوں کو وائرس سے مرنے سے بچانے کے لئے، ہم انہیں بھوک سے مرنے کے لئے نہیں چھوڑ سکتے۔ عوام کی بنیادی ضروریات کو یقینی بنانا مرکزی و ریاستی دونوں حکومتوں کی ذمہ داری ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here