ہندوستان کا سب سے گہرے میٹرو وینٹ شافٹ کی تعمیر مکمل

0
5

کلکتہ:ملک میں زیر زمین ریل وینٹی لیشن شافٹ (سرنگ کے ذریعے ہوا کی نقل و حرکت کے لئے) کی تعمیر آج مکمل ہوگئی ہےرابر ہے۔میٹرو انتظامیہ نے بتایا کہ وینٹی لیشن شافٹ 43.5 میٹر کی گہرائی پر ہے۔ اسے کولکاتا میٹرو ریل کارپوریشن (کے ایم آر سی) اور پرائیوٹ انجینئرنگ کمپنی ایفکون نے مشترکہ طور پر تیار کیا ہے۔ اس طرح کے شافٹ کی تعمیر سرنگ میں وینٹی لیشن کیلئے کیاجاتا ہے لیکن ہنگامی صورتحال میں ایمرجنسی دروازے کے طور پر بھی کام آتے ہیں۔ایمرجنسی شافٹ دروازہ دریائے ہگلی کے قریب اسٹینڈ روڈ کے قریب ہیہے۔ افکون کے پروجیکٹ منیجر ستیہ نارائن کوونر نے کہا کہ میٹرو شافٹ کو جدید انجینئرنگ تکنیکوں کے ذریعے تعمیر کیا گیا ہے۔ اس نے ارضیاتی چیلنجوں پر قابو پانے کے لئے ایسے طریقے استعمال کیے گئے ہیں کہ دریائے ہگلی کے کنارے پچھے کولکتہ سرکلر ریلوے کی پٹریوں پر کوئی اثر نہ پڑے۔کورونا وائرس کی وجہ سے، پچھلے ساڑھے چار ماہ سے ملک بھر میں میٹرو آپریشن پر پابندی عائد ہے۔ کلکتہ میٹرو نے اس عرصے میں ملک کی سب سے گہری میٹرو وینٹی لیشن شافٹ مکمل کرلیا ہے۔ 43.5 میٹر گہرائی والے اس شافٹ کا کام پیر کو مکمل ہوا۔ اس شافٹ کا استعمال ہوائی وینٹی لیشن کے ذریعہ ہنگامی صورتحال میں مسافروں کو نکالنے کے لئے بھی کیا جاسکتا ہے۔میٹرو کے ایسٹ ویسٹ راہداری میں بنایا گیا یہ منصوبہ انتہائی پیچیدہ تھا۔ اس شافٹ کی تعمیر کو دریائے ہگلی سے وابستہ دو ایکویفر اور پیچیدہ جغرافیائی حالات کے پیش نظرانتہائی پیچیدہ سمجھا جاتا تھا۔افکان کے پروجیکٹ منیجر، ستیہ نارائن کمار نے کہا کہ دریائے ہگلی کے کنارے پر 43.5 میٹر گہرائی میں وینٹی لیشن شافٹ کی تعمیر ہماری ٹیم کے لئے ایک بڑی کامیابی ہے۔انہوں نے کہا کہ دریا سے قربت کی وجہ سے، منصوبے میں بہت سارے چیلنجوں کا سامنا کرنا پڑا۔ پروجیکٹ سے پہلے ہم نے زمین کا ایک تفصیلی مطالعہ کیا۔ ہم نے سرنگ کی دیوار تعمیر کرتے وقت بہت ہی زیادہ احتیاط برتااور منصوبے کی تکمیل ایک بڑی کامیابی ہے۔10.3 میٹر چوڑا قطر کا شافٹ دونوں میٹرو سرنگوں کے درمیان ڈیزائن کیا گیا ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here